7 0

کیا آپ کو اندازہ ہے کہ موبائل فونز کا مستقبل کیا ہوسکتا ہے؟

موبائل فون نے جدت کی طرف بہت تیزی سے سفر کیا ہے۔ نہ صرف موبائل فون نیٹ ورک نے بلکہ موبائل فون کی جسامت اور ایپلی کیشنز نے بھی۔ یوں لگتا ہے کہ کمپنیوں کی جانب سے ایک دوڑ ہے دیکھیں کون خوب سے خوب صارفین کے سامنے پیش کرتا ہے۔

اسی دوڑ میں شامل ہو کر چین موبائل کمپنی شیاؤمی نے حال ہی میں ایک ڈیوائس پیش کی ہے جو پہلی نظر میں ایک ٹیبلیٹ نظر آتی ہے۔پھر یہ ایک فون بن جاتی ہے۔

ابھی یہ ڈیوائس صرف آزمائش کے لیے پیش کی گئی ہے تاکہ لوگ اندازہ کر سکیں کہ اب موبائل فون کا مستقبل کیا ہو سکتا ہے۔

اس ڈیوائس کے بارے میں کمپنی نے اپنی ویب سائٹ پر تفصیلات وڈیو کی شکل میں جاری کی ہیں۔ اس میں دیکھا جا سکتا ہے کہ کیسے ایک ٹیبلیٹ کھل کر بڑے سائز کے موبائل کی شکل اختیار کر لیتا ہے۔

شیاؤمی ڈسپلے ٹیکنالوجی پر کام کرنے والی واحد کمپنی نہیں ہے۔

ایل جی نے بھی حال ہی میں تہہ ہوجانے والے ایک ٹی وی کی تفصیلات جاری کی تھیں۔ایل جی کا یہ ٹی وی ایک مکمل ٹی وی ہے ، اس کی خوبی یہ ہے کہ جب اسے نہ دیکھا جا رہا ہو تو اسے رول کیا جا سکتا ہے۔

سام سنگ نے بھی حال ہی میں ایک ایسا فون پیش کیا ہے جسے کھول کر ایک بڑا ٹیب بنایا جا سکتا ہے۔مائیکرو سافٹ کے بارے میں بھی یہی خبریں ہیں کہ وہ تہہ ہوجانے والی ایک ڈیوائس پر کام کر رہا ہے۔

ایپل کمپنی کی جانب سے ایسے کسی فون پر کام کرنے کے حوالے سے کوئی خبر نہیں ہے لیکن اندرون خانہ ہلچل ہے کہ ایپل کی جانب سے ٹیکنالوجی تیار ہے وہ جب چاہے اسے مارکیٹ میں لا سکتا ہے۔

یہ بات تو ہو گئی ان تہہ ہوجانے والے موبائل کے ڈیزائن کی ، اب بات کرتے ہیں ان کے آپریٹنگ سسٹم کی۔گوگل کے اینڈرائیڈ سسٹم نے باضابطہ طور پر ان تہہ ہوجانے والی ڈیوائسز کو گزشتہ سال نومبر میں سپورٹ کرنا شروع کر دیا تھا جب سام سنگ نے اپنے آزمائشی فون سے پردہ اٹھایا تھا۔

موبائل فون بنانے اور اس کے آپریٹنگ سسٹم پر کام کرنے والی تمام کمپنیوں کی جانب سے ابھی تک آزمائشی مصنوعات کی خبریں آرہی ہیں۔شنید ہے کہ صارفین کے باقاعدہ استعمال کے لیے انتظار کسی بھی وقت ختم ہو سکتا ہے۔

سام سنگ کے بارے میں امید کی جا سکتی ہے کہ اپنے سالانہ گیلیکسی فون لانچ کے موقع پر رواں سال فروری میں تہہ ہوجانے والے فون کی رونمائی کرے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں