سندھ میں شراب کی فروخت پر پابندی کا فیصلہ عبوری طور پرمعطل

769823-alcohal-1489994859-962-640x480

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے شراب کی فروخت پر پابندی سے متعلق سندھ ہائی کورٹ کا فیصلہ عبوری طور پر معطل کردیا۔جسٹس اعجاز افضل کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے 2 رکنی بنچ نے شراب کی فروخت پر پابندی سے متعلق سندھ ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف درخواست کی سماعت کی، سماعت کے دوران شراب کے قانونی بیوپاریوں کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ فیصلہ صادر کرنے سے قبل ہائی کورٹ نے ہمارا موقف ہی نہیں سنا۔ جسٹس اعجاز افضل نے ریمارکس دیئے کہ شراب کی ریگولیشن ہائی کورٹ کا کام نہیں اگر کوئی قانون پر عمل نہیں کرتا تو پولیس کا کام ہے کہ وہ کارروائی کرے۔سپریم کورٹ نے سندھ میں شراب کی فروخت پرپابندی کا فیصلہ عبوری طورپرمعطل کرتے ہوئے سماعت 3 ہفتوں کے لیے ملتوی کردی، درخواست کی آئندہ سماعت سپریم کورٹ کا 3 رکنی بنچ کرے گا۔واضح رہے کہ سندھ ہائی کوٹ نے چند روز قبل صوبے بھر میں شراب کی خرید و فروخت کو فوری طور پر بند کرنے کا حکم دیا تھا۔

87total visits,1visits today