جرمنی اور اٹلی میں حجاب پہننے پر 2 خواتین کیساتھ ناروا سلوک

mg

میونخ: جرمنی میں بس ڈرائیور نے حجاب لگائی خاتون مسافر کو بس میں بٹھانے سے انکار کردیا ، جبکہ اٹلی میں مسلم خاتون کو حجاب کی وجہ سے طیارے میں سوار ہونے سے روک دیا گیا ہے۔ جرمنی کے صوبے نارتھ رائن ویسٹ فیلیامیں بس ڈرائیورنے حجاب پہنے حاملہ خاتون کوبس میں سوار ہونے سے روک دیا، جس پر ڈرائیورکے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔ بس کمپنی کے خلاف بھی کارروائی کی جا رہی ہے ۔ ادھر اٹلی کے شہر روم میں ایک مسلم خاتون کو طیارے میں سوار ہونے سے روک دیا گیا۔ انڈونیشیا سے تعلق رکھنے والے مسلم خاتون کا کہنا ہے کہ وہ روم سے لندن واپس آنے کے لیے جب ایئرپورٹ پہنچی تو عملے نیاسے نقاب اتارنے کے لیے کہا۔ انہوں نے انکار کیا جس پر عملے نے انہیں بورڈنگ سے روک دیا۔ خاتون کا کہنا تھا کہ اسی دوران اس نے عیسائی راہبائوں کو اپنے مخصوص لباس میں سیکورٹی سے گزرتے دیکھا جنہیں کسی نے نہیں روکا۔ خاتون کو آخر میں نقاب اتار کر ہی جانے کی اجازت ملی۔

53total visits,2visits today